لوہار

لوہار


لوہار ایک پیشہ ہے لوہے کا کام کرنے والے کو لوہار کہا جاتا ہے پنجاب اور منڈی بہاوالدین میں کھیتی باڑی بہت زیادہ ہوتی ہے کھیتی باڑی میں جو عام طور پر استعمال ہونے والے لوہے کے آلات ہیں وہ لوہار ہی بناتا ہے جن کو کسان کاشت کاری کے دوران استعمال کرتے ہیں لوہار نے ایک بھٹی لگائی ہوتی ہے جس میں وہ لوہے کو گرم کر کے پھر اس سے مطلوبہ آلات بناتا ہے

پنجاب میں ہر گاوں میں لوہار کی بھٹی ہوتی ہے لوہار منہ اندھیرے اٹھ کر بھٹی میں آگ جلاتا ہے پھر دیکھتے ہی دیکھتے کسانوں کا بھٹی پر ہجوم لگ جاتا ہے کوئی درانتی تیز کروا رہا ہوتا ہے کوئی کہئی یا کھرپہ ٹھیک کروا رہا ہوتا ہے کوئی ہل لے کر آیا ہوتا ہے لوہار کام کے ساتھ ساتھ بھٹی پر آنے والے لوگوں کو مختلف قصے سنا کر لطف اندوز کرتا ہے لوگ ایک دوسرے کو اچھی فصل اگانے کے مشورے دیتے نظر آتے ہیں صبح سویرے لوہار کے ہتھوڑے کی دور دور تک آواز سنائی دے رہی ہوتی ہے

کسان لوہار سے کھیتی باڑی کے آلات تیار کروا کر اپنے کھیتوں میں کام کرنے کے لیے نکل پڑتے ہیں فصلوں کی کٹائی کے دوران لوہارکی بھٹی سارا دن ٹھنڈی نہیں ہوتی سارا دن ہی ہجوم رہتا ہے جیسے جیسے مشین عام ہو رہی ہےلوہار کی یہ بھٹیاں بھی کم ہوتی نظر آ رہی ہیں لوہار اپنی مزدوری میں پیسے کی بجائے اناج لیتا ہے جب فصل کی کٹائی ہوتی  ہے گندم اور چاول کسانوں کے گھر آتے تو ان میں سے لوہار کا حصہ الگ کرکے لوہار کو دیا جاتا آج انسان کی ضروریات اس حد تک بڑھ گئی ہیں کہ اتنے میں گھر نہیں چلتا اس لیے لوہار بھی آگے بڑھ کر مختلف کاروبار میں شریک ہوئے آج اگر دیکھیں تو گاوں میں لوہار کی کم بھٹی نظر آتی ہے لوہار اپنے پیشے کو چھوڑ کر دوسرے منافع بخش پیشے اور کاروبار اپنا رہے ہیں

یا پھر بیرون ممالک میں جا کر کام کر رہے ہیں

 

(عامر عرفان جوئیہ)